اتنی مہنگائی،،دھائی ہے دھائی

تبدیلی سرکار نے مہنگائی کی بھڑکتی آگ کو مزید پٹرول ڈال دیا،، حکومت نے پیٹرول کی قیمت میں تیسری مرتبہ اضافہ کردیا ۔ پیٹرول اور ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 6 روپے جب کہ لائٹ اسپیڈ ڈیزل اور مٹی کی تیل میں فی لیٹر 3 روپے اضافہ کردیا گیا جس سےپٹرول کی قیمت بڑھ کر اٹھانوے روپے نواسی پیسے پر پہنچ گئی جبکہ ہائی اسپیڈ ڈیزل 117 روپے تینتالیس پیسے ، مٹی کا تیل نواسی روپے 31 پیسے ،لائٹ ڈیزل 80 روپے چون پیسے فی لیٹر ہوگیا۔ گزشتہ روز آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی نے پیٹرولیم منصوعات کی قیمتوں میں 11 روپے 92 پیسے اضافے کی تجویز کی تھی۔
عوام سراپا احتجاج ہیں،،کہتے ہیں پی ٹی آئی کو مہنگائی پرقابو پانے کیلئے ووٹ دیا تھا نہ کہ مہنگائی میں مزید اضافے کیلئے منتخب کیا تھا،غریب کو ریلیف دینے کے بجائے سرمایہ داروں کو ریلیف ملا۔
سیاسی رہنماؤں نے بھی پٹرولیم قیمتوں میں اضافے کی مذمت کرتے ہوئے اسے عوام دشمنی قرار دیا،،،ان کا کہنا کہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ سراسرظلم ہے کیونکہ پٹرول کی قیمتیں بڑھنے سے عوام کی زندگی مزید ابتر ہوجائے گی۔
ادھر ٹرانسپورٹرز نے بھی پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کو مسترد کردیا ،،،کراچی ٹرانسپورٹ اتحاد کے صدر ارشاد بخاری نے اضافہ واپس لینے کا مطالبہ کردیا

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.