بھارتی سپریم کورٹ نے ہندوانتہاپسندوں کو امن دشمن قرار دیدیا

بھارتی سپریم کورٹ نے الہ آباد ہائی کورٹ کے فیصلے کو برقرار رکھتے ہوئے رام مندر میں عبادت کی درخواست کو مسترد کردی اور ریمارکس دیئے کہ کیا ملک میں امن نہیں رہنے دو گے؟؟؟؟ سابق جنرل سیکرٹری آف رام جنم بھومی مندر نرمن نیاس نے بھارتی سپریم کورٹ میں درخواست دائر کررکھی تھی جس میں الہ آباد ہائی کورٹ کے فیصلے کو چیلنج کرتے ہوئےہندوؤں کو رام مندر میں عبادت کرنے کی اجازت طلب کی گئی تھی ۔
سماعت کے دوران چیف جسٹس رانجن گوگوئی نے سخت لہجہ اختیار کرتے ہوئے کہا کہ کیوں امن کے دشمن بنے ہوئے ہو،،،کیا تم لوگ ملک میں امن نہیں رہنےدوگے،،،ملک میں عجیب صورتحال ہے،،،ہر کوئی دوسرے کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرتا رہتا ہے۔ سپریم کورٹ نے الہ آباد ہائی کورٹ کا فیصلہ مسترد کرنے سے انکار کرتے ہوئے اس کے فیصلے کو برقرار رکھا اور ایودھیا میں رام مندر کی زمین پر عبادت کی اجازت دینے سے انکار کردیا ۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.