بھارت کا خلا میں سیارہ تباہ کرنے پر پاکستان کا اظہارِ تشویش

ترجمان دفتر خارجہ نے ایک بیان میں بھارت کے اینٹی سیٹلائٹ ویپن ٹیسٹ پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ متعلقہ اداروں اور خلائی ماہرین کے بھارتی تجربے پر جائزے تشویش ناک ہیں، رپورٹس ہیں کہ بھارتی تجربے سے خلا میں بکھرے ملبے کا عالمی خلائی اسٹیشن سے تصادم کا خطرہ بڑھ گیا ہے۔
ترجمان نے کہا کہ بھارت کا اینٹی سیٹلائٹ ویپن ٹیسٹ عالمی برادری کے لیے بھی قابل تشویش ہونا چاہیے، اس کے فوجی پہلوؤں کو نظر انداز کرنا غلطی ہو گا۔انہوں نے مزید کہا کہ بھارتی تجربہ طویل المدتی پر امن خلائی سرگرمیوں کے لیے بھی خطرہ ہے، پاکستان فوجی مقاصد کے لیے خلا کے عدم استعمال کا پر زور حامی ہے۔
گزشتہ روز ناسا ٹاؤن ہال میں میٹنگ کے دوران ناسا چیف نے بھی بھارتی تجربے پراظہار تشویش کرتے ہوئے کہا تھا کہ بھارتی تجربے کے نتیجے میں 400 ٹکڑے دیکھے گئے ہیں جب کہ 24 ایسے ٹکڑے ہیں جو انٹرنیشنل سپیس سٹیشن سے بھی بڑے ہیں۔ جم برڈنسٹن نے کہا کہ اس قسم کا اقدام خلا میں انسانوں کے لیے باعث خطرہ ہے اور یہ ناقابل قبول ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.