کرونا وائرس کی دہشت پاکستان میں بھی برقرار

چین اور پاکستان سمیت دنیا بھر میں کرونا وائرس کی دہشت برقرار ہے ،،کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے خطرے کے باعث گلگت بلتستان کے اضلاع ہنزہ اور نگر میں چین سے ہجرت کر کے آنے والے موسمی پرندوں کے شکار پر پابندی عائد کر دی گئی ۔ ہنزہ کی ضلعی انتظامیہ نے شکار پر پابندی کا ہدایت نامہ جاری کرتے ہوئے دفعہ 144 نافذ کر دی ۔
ہدایت نامے میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ ہر سال لاکھوں پرندے چین سے گلگت بلتستان آتے ہیں اور اس سال بھی یہ موسمی پرندے بڑی تعداد میں پاکستانی حدود میں داخل ہو رہے ہیں جن کے شکار سے کرونا وائرس پھیلنے کا خدشہ ہے اس لئے پرندوں کے شکار پر پابندی کا اقدام اٹھایا گیا ہے۔
دوسری جانب کورونا وائرس کے باعث تھر کول پراجیکٹ پر کام کرنے والے 600 سے زائد چینی باشندوں کی پاکستان واپسی روک دی گئی۔ تھر کول انتظامیہ کے مطابق چین میں صورتحال بہتر ہونے تک ملازمین کو پاکستان نہ آنے کا حکم دیا گیا ہے اور حکومت کی طرف سے کلیئرنس ملنے کے بعد چینی ملازمین کی واپسی کا فیصلہ ہوگا جبکہ منصوبے پر پہلے سے کام کرنے والے چینی ملازمین کی روزانہ کی بنیاد پر مانیٹرنگ کی جارہی ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: