پٹرول پر ٹیکس بڑھا دیا

لاہور ہائیکورٹ میں سڑکوں کی تعمیر اور ٹھیکیداروں کو ادائیگیاں نہ کرنے کیخلاف کیس کی سماعت ہوئی۔فنانس سیکرٹری پنجاب نے عدالت کو بتایا کہ ٹیکس کے طے شدہ اہداف حاصل نہیں کر پائے،پنجاب میں 100 ارب روپے کا شارٹ فال ہے۔ جس پر عدالت نے کہا کہ حکومت ٹھیکیداروں سے کام کرا لیتی ہے لیکن پیسے نہیں دیتی۔عدالت نے فنانس سیکرٹری پنجاب کو 15 روز میں ٹھیکیداروں کو ادائیگیوں کا حکم دے دیا۔دوران سماعت جسٹس امیر بھٹی نےریمارکس دیئے کہ حکومت نےپٹرول پرٹیکس بڑھا دیا، ڈالر کی قدر ہر روز بڑھ رہی ہے لیکن پتہ نہیں حکومت کہاں سوئی ہوئی ہے،،، جسٹس امیر بھٹی نے حکومت روز کسی نہ کسی ملک کے سربراہ کو بلا کر اربوں روپے مانگتی ہے، حکومت اربوں روپے وصول کر لیتی ہے لیکن جاتے کہاں ہیں ؟ اربوں ڈالر لینے کے بعد قیمت نیچے جانے کے بجائے اوپر جا رہی ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.