مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی جبرجاری،اقوام عالم دیکھنے سے عاری

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج ہر نئے دن کے ساتھ کشمیریوں پر ظلم کی نئی داستان رقم کر رہی ہے۔ آزادی کی جنگ لڑتے نہتے کشمیریوں پر رہاستی دہشت گردی اور بربریت کا انتہا کر دی گئی۔ ہر نیا طلوع ہونے والا سورج آزادی کی امید دلاتا ہے تو دوسری جانب نیا دن بھارتی سفاکیت کا نیا انداز بھی دکھاتا ہے۔ کبھی سیدھی گولیوں کی بوچھاڑ تو کبھی پیلٹ گن سے آنکھوں کی بینائی چھیننے کے واقعات، کبھی مساجد کی بے حرمتی تو کبھی چادر اور چاردیواری کے تقدس کی پامالی، ہر نیا دن ظلم کی نئی داستان لاتا ہے۔ آج بھی جامع مسجد سری نگر کی بے حرمتی کیخلاف مقبوضہ وادی میں یوم تقدس منایا جارہا ہے۔

حریت رہنما میر واعظ عمر فاروق نے مقبوضہ وادی میں آج یومِ تقدّس منانے کا اعلان کیا تھا۔ یومِ تقدس بھارتی فورسز کی جامع مسجد سری نگر کی بے حرمتی کرنے کے خلاف منایا جا رہا ہے۔ اس موقع پر پُر امن احتجاجی مظاہرے کیے جا رہے ہیں۔ وادی میں موبائل اور انٹرنیٹ سروس بند کر دی گئی، تعلیمی اداروں میں تعلیمی سرگرمیاں بھی محدود ہیں۔ مگر بھارتی اقدامات کشمیریوں کے حوصلے پست نہیں کر سکے۔

دوسری جانب بھارتی فورسز نےجموں و کشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین یاسین ملک کو مظاہروں کی قیادت سے روکنے کے لیے ان کے دفتر سے گرفتار کرلیا۔اس سے قبل اپنے ایک بیان میں یاسین ملک کا کہنا تھا کہ عالمی برادری کو بھارتی فورسز کی جانب سے کشمیری عوام کے استحصال کا نوٹس لینا چاہیے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.