سعودی عرب کی کوششیں رنگ لے آئیں۔۔۔۔

یمنی حکومت اور جنوبی عبوری کونسل کے درمیان امن سمجھوتے کا اعلان سعودی ولی عہد محمد بن سلمان نے دارالحکومت ریاض میں کیا۔اس معاہدے کو ’ریاض سمجھوتے‘ کا نام دیا گیا ہے۔معاہدےپریمن کی حکومت اورجنوبی عبوری کونسل نے دستخط کیے جس کے تحت 7 روز میں یمن کی قانونی طور پر تسلیم شدہ حکومت کی جنوبی شہرعدن میں واپسی ہوگی۔سمجھوتے کے مطابق یمن حکومت میں شمالی اور جنوبی یمن کو یکساں نمائندگی دی جائے گی اورمسلح ملیشیا حکومت کے کنٹرول میں آجائیں گی جبکہ تمام ملٹری اور سکیورٹی فورسز وزرات داخلہ اور دفاع کے ماتحت ہوں گی۔اس موقع پر سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کا کہنا تھا کہ یہ معاہدہ یمن کے استحکام کے نئے دور کا آغاز ہے اوربھرساتھ کی بھی یقین دہانی کروائی۔معاہدے کے حوالے سے ترجمان جنوبی عبوری کونسل کا کہنا ہے کہ سمجھوتہ حوثی ملیشیا کے خلاف جنگ میں اہم موڑ ہوگا۔ سمجھوتے سے عرب اتحاد اور جنوبی عبوری کونسل میں تعلقات مضبوط ہوں گے۔اقوام متحدہ کے ترجمان نے معاہدے پر دونوں ممالک کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ سمجھوتہ یمن میں مسئلےکے پرُامن حل کیلئے اہم قدم ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں
1 تبصرہ
  1. amber shahzadi کہتے ہیں

    its a good thing

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.