امریکا اور چین کے درمیان نیا تنازع شدت پکڑ گیا

امریکی وزارت انصاف کی جانب سے چین کی معروف موبائل ساز کمپنی کے خلاف مقدمہ دائر کرنے پر چین نے سخت ردعمل دیتے ہوئے اسے چینی معیشت کو تباہ کرنے کی کوشش قرار دےدیا۔ امریکا کی جانب سے ایران کے ساتھ رقوم کی غیر قانونی لین دین، دھوکا دہی اور صنعتی جاسوسی جیسے 13 سنجیدہ الزامات کے تحت موبائل کمپنی کی سربراہ مس مینگ پرمقدمہ دائر کیا گیا ہے
دوسری جانب چین کی وزارت خارجہ نے موبائل کمپنی کی سربراہ پر امریکی الزامات کی تردید کرتے ہوئے مقدمہ واپس لینے کا مطالبہ کیا ہے جبکہ موبائل کمپنی نے بھی امریکی الزامات کو مسترد کردیا ۔جبکہ چین کی جانب سے مقدمہ دائر کرنے سے باز رہنے کی تنبیہ کے باوجود امریکا نے گزشتہ روز مقدمہ دائر کردیا
چین کی معروف موبائل کمپنی کی صدر کو امریکا کی درخواست پر یکم دسمبر کو کینیڈا میں حراست میں لیا گیا تھا تاہم 10 ملین کینیڈین ڈالر کی زر ضمانت پر انہیں رہا کردیا گیا تھا لیکن وہ کینیڈا سے باہر نہیں جاسکتیں۔ امریکا کمپنی کی سربراہ کی حوالگی کے لیے آج درخواست دائر کرسکتا تھا، ۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.