شام میں فوجی کارروائی: ترکی پر پابندیاں عائد

ترکی کے ساتھ 100 ارب ڈالر کے تجارتی معاہدے پر ہونے والے مذاکرات فوری منسوخ کر دیئے جب کہ اسٹيل ٹيرف بھی دگنا کرکے 50 فيصد کر ديا گيا۔ امريکا نے ترکی کے دفاع، داخلہ اور توانائی کے وزراء کو بليک لسٹ کرکے ان کے اثاثے منجمند کر ديے جب کہ تينوں وزراء امريکا کا سفر بھی نہيں کرسکيں گے۔ترکی پر پابندیوں کا اعلان امریکی نائب صدر مائیک پنس نے امریکی سیکرٹری خزانہ سٹیو منوچن کے ہمراہ وائٹ ہاؤس میں کیا ۔۔۔ امریکا کے شام میں انسانی جانوں کے ضیاع پر تحفطات ہیں اور اس سلسلے میں خطے کے دیگر ممالک کو اعتماد میں لیا جارہا ہے۔بعدازاں امریکی سیکرٹری خزانہ نے بتایا کہ شام میں حملے کی پاداش میں امریکا نے ترکی پر فوری طور پر پابندیاں عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔اس سے قبل امريکی صدر ٹرمپ نے اپنے ايک بيان ميں کہا تھا کہ شام میں ترک اقدام سے انسانی بحران جنم لے رہا ہے،،،ترکی نے خطرناک اور تباہ کن راستہ جاری رکھا تو ترک معیشت تباہ کر دی جائے گی۔دوسری جانب اطلاعات ہیں کہ ترکی اور کردوں کے مابين بات چيت شروع کرانے کےليے امريکی نائب صدر مائيک پنس صدر ٹرمپ کی ہدايت پر جلد ترکی کا دورہ کريں گے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.