ترک فورسز پر حملوں کا جواب،”آپریشن سپرنگ شیلڈ ” کا آغاز

0
ترک فورسز پر شامی حکومتی افواج کے حملوں کے بعد ترکی نے شامی صوبے ادلب میں "آپریشن سپرنگ شیلڈ ” کا آغاز کردیا ،ترک وزارت دفاع کے مطابق آپریشن گذشتہ دنوں ترک فوج پر شامی حکومتی فورسز کے حملوں کے بعد شروع کیا گیا ، آپریشن میں شامی فوج کے 2 روسی ساختہ ایس یو 24 لڑاکا طیارے مار گرائے ہیں جبکہ آپریشن کے دوران ترکی کا ایک ڈرون طیارہ بھی تباہ ہوا ۔ترک وزیر دفاع کے دعوے کے مطابق آپریشن ‘سپرنگ شیلڈ ‘ میں اب تک شام کے 8 ہیلی کاپٹر اور 103 ٹینکوں سمیت اہم دفاعی تنصیبات کو تباہ کیا جا چکا ہے ،، ترک حکام کا کہنا ہے کہ ترکی آپریشن کے دوران اپنے دفاع میں شامی حکومتی فوج اور ان کے اتحادیوں کو نشانہ بنایا جائے گا، اس سلسلے میں روس سے بات چیت جاری ہے۔دوسری جانب شامی خبررساں ادارے نے دو جہاز گرائے جانے کی تصدیق کی ہے تاہم اس کے مطابق واقعے میں کوئی جانی نقصان نہیں ہوا اور دونوں جہازوں کے پائلٹ بحفاظت نکلنے میں کامیاب ہوگئے۔27 فروری کو ادلب میں شامی فوج کے ترک فورسز پر حملے میں 34 ترک فوجی جاں بحق ہوگئے تھے جس کے بعد ترکی نے بدلہ لینے کا اعلان کیا تھا۔یہ حملہ 2016 میں شام کے تنازعے میں اپنی افواج اتارنے کے بعد سے ترک فوج کا سب سے بڑاجانی نقصان ہے۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: