رحیم یار خان،ٹرین کو حادثہ،11 مسافر جاں بحق،56 زخمی

حادثے کی اطلاع ملتے ہی اے ایس پی ڈاکٹر حفیظ الرحمان اور پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچی۔ ٹرین حادثے میں زخمی ہونے والے افراد کو ٹی ایچ کیو صادق آباد اور شیخ زید ہسپتال رحیم یار خان منتقل کیا گیا جہاں انہیں طبی امداد دی جا رہی ہے۔ ڈی پی اوعمر سلامت کے مطابق حادثے میں اکبر ایکسپریس کے اسسٹنٹ ڈرائیورسمیت 11افراد جاں بحق اور56 زخمی ہیں۔ حادثے کے باعث4 بوگیاں متاثراور2 ٹریک سے اتر گئیں۔اکبرایکسپریس حادثے کے بعد ٹرین آپریشن معطل کردیا گیا، بزنس ایکسپریس، کراچی ایکسپریس کو مختلف سٹیشنزپرروک لیا گیا۔ گرین لائن، رحمان بابا ٹرین کا سفر بھی تعطل کا شکار ہے۔ ڈپٹی کمشنرجمیل احمد اورڈی پی اوعمرسلامت نے ریسکیو اینڈ ریلیف آپریشن کی خود نگرانی کی۔ آپریشن میں ریسکیو1122 کی21 اور10 نجی ایمبولینس شریک ہوئیں۔ زخمیوں اورلاشوں کو بوگیاں کاٹ کر نکالا گیا۔ پاک فوج کے جوانوں نے بھی امدادی کارروائیوں میں حصہ لیا۔ ڈی پی او کاکہنا ہے کہ ابتدائی معلومات کے مطابق حادثہ بروقت سگنل تبدیل نہ کرنے کی وجہ سے پیش آیا۔ ڈپٹی کمشنرجمیل احمد جمیل نے بتایا کہ 56 زخمی مسافروں کوہسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔ اپ اینڈ ڈاؤن دونوں ٹریک کو ٹرینوں کی آمدورفت کیلئے بند کر دیا گیا ہے۔ ٹرین حادثے میں زخمی اورجاں بحق افراد کی معلومات کے لیے کنٹرول روم قائم کردیا گیا ہے، شہری 9230709-068 اور03009402579 پر رابطہ کرسکتے ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.