افغان امن مذاکرات کو سبوتاژ کرنے کی ایک اورناکام کوشش

0
کابل میں افغان نائب صدر امراللہ صالح کے قافلے پر حملہ کیا گیا جس میں وہ بال بال بچ گئے۔ حملے کے نتیجے میں 4 افراد ہلاک ہوگئے جبکہ محافظوں سمیت متعدد افراد زخمی ہوگئے۔نائب صدر امرللہ صالح کی میڈیا ٹیم کے ترجمان کا کہنا ہے خود کش حملہ آور نے نائب صدر امراللہ صالح کو اس وقت نشانہ بنانے کی کوشش کی جب وہ کام کے لیے گھر سے نکلے تاہم خوش قسمتی سے وہ اس حملے میں محفوظ رہے۔
یہ افسوسناک واقعہ کابل کے علاقے تیمانی میں پیش آیا جبکہ یہ خودکش حملہ اس قدر شدید تھا کہ اردگرد کی متعدد دکانیں اور سڑک پر کھڑی درجنوں گاڑیاں تباہ ہو گئیں ، حملے کے بعد سکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے کر تحقیقات شروع کر دیں۔افغانستان میں طالبان اور امریکہ کےمابین امن منصوبےکےبعد دہشتگرد حملوں میں اضافہ ہواہےجو ایسےعناصر کی کارروائی ہو سکتی ہےجو افغانستان میں امن قائم ہوتانہیں دیکھناچاہتےجبکہ25 جولائی کو اقوام متحدہ کی سامنےآنےوالی رپورٹ میں بھارت کودہشتگردی کامرکز قرار دیا گیا ہے۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: