بھارتی سیاستدانوں کا بھیانک چہرہ

عوامی اجتماع کے دوران سابق وزیراعلیٰ سدا رامیا کے پاس ایک خاتون شکایت لیکر پہنچی تو سدارمیا کو خاتون پر اس قدرغصہ آیا کہ انہوں نے خاتون کے ہاتھ سے مائیک چھین لیا۔سدارمیا خاتون سے مسلسل بدسلوکی کرتے رہے اوراسے خاموش رہنے کے لئے بولتے رہے۔ اسی دوران انہوں نے خاتون سے مائیک چھیننے کے لئے جیسے ہاتھ بڑھایا تو ان کا ہاتھ خاتون کے ڈوپٹے پرچلا گیا جس پر انہوں نے خاتون کا ڈوپٹہ ہاتھ سے نیچے گرادیا
خاتون مقامی ایم ایل اے اور سدا رامیا کے بیٹے یاتھندرا پر تنقید کررہی تھی۔خاتون کا کہنا تھا کہ سدا رامیا اپنے حلقے کے لوگوں سے ملاقات نہیں کرتے،اسمبلی الیکشن کے بعدوہ پہلی مرتبہ اُنہیں دیکھ رہی ہے،،،واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی ،،، جس کے بعد کرناٹک کے سابق وزیراعلیٰ کو شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑرہا ہے
کسی بھارتی سیاستدان یا وزیر کی جانب سے کھلی غنڈہ گردی کا یہ پہلا موقع نہیں اس سے قبل بھی،،، بھارتی وزیر اکثر وبیشتر خبروں کی زینت بنے رہتے ہیں۔ گزشتہ ماہ بھارتی ریاست کرناٹک کے وزیراعلیٰ کمارا سوامی ٹیلی فون پر سیاسی مخالف کو قتل کرنے کے احکامات دیتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑے گئے تھے ۔ وزیراعلیٰ کی گفتگو دفتر میں لگے کیمرے میں محفوظ ہوئی جس کے بعد ملازم نے اُسے لیک کردیا۔ جس کے بعد اُن پر اپوزیشن جماعتوں نے شدید تنقید کی۔ ۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.