سندھ ہائیکورٹ:بلاول بھٹو کو سیکورٹی فراہمی سے متعلق درخواست کی سماعت

پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی سیکیورٹی سے متعلق درخواست کی سندھ ہائیکورٹ میں سماعت ہوئی، بلاول بھٹوزرداری کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ انٹیلی جینس اداروں کی رپورٹس کے مطابق بلاول بھٹو کو سنگین سیکیورٹی خدشات لاحق ہیں۔ چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے ریمارکس دیئے کہ ہر شہری کو تحفظ اور سیکیورٹی فراہم کرنا ریاست کی ذمہ داری ہے۔ بلاول بھٹو زرداری کے وکیل نے کہا کہ ہم ہر فردکے لیے سیکیورٹی نہیں مانگ رہے۔اس پرچیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے کہا میں بتاؤں کہ سندھ حکومت نے بلاول ہاؤس کی سیکیورٹی پر کتنے اہلکار تعینات کررکھے ہیں؟

وکیل بلاول بھٹو نے کہا کہ بلاول کی سیکیورٹی صوبائی حکومت کا مسئلہ نہیں،وفاق کی ذمہ داری ہے،بلاول بھٹو سندھ کے علاوہ بھی سفر کرتے ہیں۔ چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ بتایا جائے سپریم کورٹ نے سرکاری عہدہ نہ رکھنے والوں کی سیکیورٹی پرکیا احکامات دیئے؟سپریم کورٹ نے زیادہ سیکیورٹی رکھنے والوں سے تو سیکیورٹی واپس لینے کا حکم دیاہے،جائزہ لیناچاہتےہیں سیکیورٹی سےمتعلق سپریم کورٹ کے نوٹس کا کیا بنا۔سندھ ہائیکورٹ عدالت نے وی وی آئی پیز کی سیکورٹی سے متعلق سپریم کورٹ کےفیصلےکی کاپی طلب کرتے ہوئےسماعت 15 جنوری تک ملتوی کردی

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.