سیاسی میدان کے حریف حقیقی زندگی میں حلیف

کہتے ہیں ہاتھ کی تمام انگلیاں برابرنہیں ہوتیں لیکن کھانا کھانے کے وقت تمام انگلیاں برابرہوجاتی ہیں بالکل اسی طرح ہمارے سیاستدان بھی عوام کےسامنےایک دوسرےکےخون کےپیاسےدکھائی دیتےہیں اور ایسےایسےبیانات دیتے ہیں جیسےوہ ابھی مخالفین کوچیرپھاڑدیں گے. سیاسی رہنماؤں کی تقاریر
لیکن یہی سیاستدان نجی محفلوں میں ایسے شِیروشکر دکھائی دیتے ہیں کہ یہ گمان کرنا مشکل ہوتا ہے کہ ان میں حکومتی رکن کون ہے اور حزب مخالف کون۔
وقت بدلا،پارٹیاں بدلیں لیکن سیاستدانوں کا رویہ نہیں بدلا،،پہلے پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن میں سیاسی جنگ نظرآتی تھی جو اب اس میں پی ٹی آئی کا اضافہ ہوچکا ہے۔۔۔لیکن سیاست میں سخت مخالفت کے باوجود مسلم لیگ ن اور تحریک انصاف کے رہنماؤں کے ذاتی تعلقات بے مثال نظر آتے ہیں ۔ اگر یقین نہیں آتا تو ذرا یہ فوٹیج ملاحظہ فرمائیں
یہ فوٹیج لاہور فیسٹیول کی ہے جس میں وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری اور ن لیگی رہنما مفتاح اسماعیل اور مصدق ملک بھی شریک ہوئے ،،،ویڈیو میں تینوں رہنماؤں کو آپس میں خوش گپیاں کرتے دیکھا جاسکتا ہے۔
اس دوران وفاقی وزیر فواد چوہدری نے دوستوں سے کہا کہ خیال کریں کیمرے آن ہیں،جس پر مفتاح اسماعیل نے جواب دیا کہ کوئی بات نہیں آپ کے ساتھ تصاویر بہت مشہور ہوتی ہیں۔
اس سے قبل بھی گزشتہ سال وفاقی وزیر فوادچوہدری،سابق وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل اورمصدق ملک سمیت کئی ن لیگی و پی ٹی آئی رہنماؤں کی ایک ساتھ پارٹی کرتے تصویر وائرل ہوئی تھی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.