ہانگ کانگ میں مجوزہ قانون کےخلاف احتجاج کا سلسلہ طول پکڑگیا

ہانگ کانگ میں مجوزہ قانون کے خلاف احتجاج کا سلسلہ طول پکڑ گیا ،،مارچ میں مخصوص ٹوپیاں اورگیس کے ماسک پہنےہزاروں مظاہرین شریک تھے جو ٹریفک کی رکاوٹوں کو توڑتے ہوئےآگے بڑھے،،، پولیس نے انہیں روکنے کی کوشش تو مظاہرین نے اہلکاروں پر پتھراؤ شروع کردیا اور ان پر بوتلیں پھینکیں جس پر اہلکاروں نے انہیں منتشر کرنے کیلئے مظاہرین پر لاٹھی چارج کیا اور آنسوگیس کے شیلز فائر کئے کردیاگزشتہ ہفتے پولیس اور مظاہرین کے درمیان کشیدگی شدید بڑھ گئی تھی اور مظاہرین نے ہانگ کانگ ایئرپورٹ پر شدید احتجاج کیا تھا،جس کے نتیجے میں ایئرپورٹ کا نظام مفلوج ہو کر رہ گیا اور پروازوں کو بھی معطل کرنا پڑا۔ ہانگ کانگ میں احتجاج کا سلسلہ چین کو شہریوں کی حوالگی کے حوالے سے مجوزہ قانون کے خلاف شروع ہوا تھا، تاہم اس قانون کی واپسی کے باوجود شہریوں نے جمہوریت اور پولیس کے احتساب کا مطالبہ کر دیا تھا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.