“اِس سادگی پہ کون نہ مرجائے اے خُدا”

وزیراعظم عمران خان نے انتخابات سے قبل سادگی کے بیابات پر عمل کرتے ہوئےوزیراعظم ہاؤس کےبجائےملٹری سیکرٹری کےگھر میں رہائش اختیار کی جو کہ ایک احسن اقدام ہے لیکن اس سادگی کے باوجود جب وزیراعظم ہاؤس کا ایک ماہ کا بجلی کا بل 15 لاکھ 31 ہزار سے زائد آجائے تو پھریہ سادگی بھلا کس کام کی ۔۔

بات یہیں تک نہیں بلکہ وزیراعظم ہاؤس آئیسکو کا 9 کروڑ 97 لاکھ87 ہزار687 روپے کا نادہندہ ہے۔ وزیراعظم ہاؤس کا واجب الادا بجلی کا بل 10 کروڑ 13 لاکھ 68 ہزار 420 تک پہنچ گیا ہے جب کہ وزیراعظم ہاؤس نے گزشتہ ایک ماہ میں 84 ہزار یونٹ استعمال کیے ہیں۔

آئیسکو کی ویب سائٹ پر وزیراعظم ہاؤس کا بجلی کا بل موجود ہے جب کہ وزیراعظم ہاؤس کے بجلی بل کی ادائیگی پی ڈبلیو ڈی کی ذمہ داری ہوتی ہے۔ وزیراعظم ہاؤس کی جانب سے بجلی کا 5 لاکھ9 ہزار427 روپے کا آخری بل نومبر میں جمع کرایا گیا اور وزیراعظم ہاؤس کے جولائی، اگست اور ستمبر کے بجلی کے بل ادا نہیں کیے گئے۔ تبدیلی سرکار کے سادگی دعوؤں پرعوام تو بس یہی کہنے پر مجبور ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.