دورہ انگلینڈکیلئےپی سی بی کاکھلاڑیوں کوتین ماہ کیلئےحفاظتی اقدامات کےتحت رکھنےکافیصلہ

0

اس بارے میں کرکٹ بورڈ کےسی ای او وسیم خان نےاپنی ٹویٹ کےذریعےبتاتے ہوئے کہا کہ کھلاڑیوں کی صحت اور حفاظت پر کوئی سمجھوتہ نہ کرتے ہوئے انھیں دورہ انگلینڈ کے بارے آگاہ رکھا جائے گا۔وسیم خان کا کہنا تھا کہ اس حوالے سے اقدامات اٹھاتے ہوئے پاکستان کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں کو سخت ماحول میں رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ اگر کوئی کھلاڑی ان شرائط سے راضی نہ ہوں تو انھیں اختیار ہوگا کہ وہ اس پر عمل نہ کریں۔ اس حوالے سے مکمل تفصیلات آئندہ ہفتوں میں انھیں فراہم کر دی جائیں گی۔
اس سے قبل چیف ایگزیکٹو آفیسرپی سی بی نے کہا تھا کہ انگلش کرکٹ بورڈ کیساتھ پی سی بی کی آن لائن میٹنگز ہوئیں، انگلش بورڈ ہمارے ساتھ سیریز کھیلنے کا خواہش مند ہے۔ان کا کہنا تھا کہ کھلاڑیوں کو دورہ برطانیہ کے حوالے سے اعتماد میں لیا جائے گا۔ان کیساتھ مسلسل ٹیسٹ اور دیگر سہولیات پر بات ہو رہی ہے۔ پاکستان سے پہلے ویسٹ انڈیز کی ٹیم انگلینڈ جا رہی ہے۔ ویسٹ انڈیز کے دورے کو نظر میں رکھ کر بھی فیصلہ کریں گے۔ذرائع کےمطابق پاکستان کرکٹ ٹیم 5 یا 6 جولائی کوانگلینڈ کےلیےروانہ ہوگی جہاں وہ شیڈول کےمطابق 3 ٹیسٹ اور 3 ہی ٹی ٹوئنٹی میچز کھیلے گی۔قومی ٹیم کو 2 ہفتے قرنطینہ میں رہنے پڑے گا،جہاز سے اترتے ہی کرونا ٹیسٹ ہوگا، پریکٹس میچزکیلئےای سی بی نے 25 سے 28 کھلاڑیوں کو لانے کی اجازت دی ہے۔اگر فلائٹ آپریشن بحال نہ ہوا توٹیم کوچارٹرڈ فلائٹ سے جانا ہوگا، یہ تمام اخراجات میزبان بورڈ ہی برداشت کرے گا۔

جواب دیجئے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: