ہماری زمین اسرائیل کے حوالے کی گئی توچپ نہیں بیٹھیں گے

0
فلسطین کے صدر محمود عباس نے دھمکی دی ہے کہ اگر مقبوضہ مغربی کنارے کا اسرائیل میں انضمام کیا گیا تو فلسطینی حکام کے اسرائیل اور امریکا سے ہوئے معاہدے کو مکمل طور پر منسوخ تصور کیا جائے گا۔
انہوں نے کہا کہ ہم نے امریکا اور اسرائیلی حکومت سمیت متعلقہ بین الاقوامی فریقین کو آگاہ کردیا ہے کہ اگر اسرائیل نے ہماری زمین کے کسی حصے کا انضمام کرنے کی کوشش کی تو ہم ہاتھ باندھے نہیں کھڑے رہیں گے۔
امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اسرائیل اور فلسطین کے درمیان تنازع کے حل کے لیے جنوری میں اپنی طرز کا ایک منصوبہ لے کر آئے تھے جس میں متعدد متنازعہ شقوں پر فلسطین سمیت دنیا بھر کے مسلم ممالک نے تحفظات کا اظہار کیا تھا۔
اس مجوزہ منصوبے میں فلسطین کو محدود اختیارات کے ساتھ اقتدار دینے کی تجویز پیش کی گئی تھی تاہم سب سے زیادہ متنازع بات یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت قرار دینے کے ساتھ ساتھ مقبوضہ مغربی کنارے کی بستیوں اور وادی اردن کو اسرائیل میں ضم کرنے کی اجازت دینا تھا۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: