فلسطینیوں کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو گیا

0

فلسطین کے وزیر اعظم محمد اشتیہ نے کہا ہے کہ اگر اسرائیل نے مقبوضہ علاقوں کو ضم کیا تو فلسطین مقبوضہ بیت المقدس کو اپنا دارالحکومت تسلیم کرتے ہوئے تمام مغربی کنارے اور غزہ پر ریاست کا اعلان کردے گا۔ریاست کے قیام کا مطلب ہے کہ فاؤنڈیشن کونسل ہوگی، آئین کا اعلان ہوگا اور فلسطین 1967 کی سرحدوں پر قائم ہوگا ،،اس کے علاوہ بیت المقدس ریاست کا دارالحکومت ہوگا اس لئے ہم یہ چاہتے ہیں کہ اسرائیل کو بھی حالات کی سنگینی کا احساس ہو۔فلسطینی وزیر اعظم نے کہا کہ ریاست کے اعلان کے بعد ہم عالمی برادری سے اس سرزمین کو تسلیم کرنے کا مطالبہ کریں گے اور میں پرامید ہوں کہ یورپی حکومتیں فلسطین کو تسلیم کرنے پر غور کریں گی کیونکہ برطانوی حکومت اور تمام یورپی حکومتیں واقعی اس مسئلےکو بہت سنجیدگی سے دیکھ رہی ہیں۔دوسری جانب اس ضمن میں برطانوی دفتر خارجہ کے ترجمان نےفلسطینی وزیراعظم کے اس دعوے کی تصدیق کی ہے، ان کا کہناہے کہ برطانیہ فلسطینی ریاست کو تسلیم کرے گا اور یہ اقدام علاقائی امن کے لیے بہترین ثابت گا۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: