سب سے بڑی جمہوریت کا راگ الاپنے والا مودی انسانیت بھول بیٹھا

بھارت میں مسلمانوں کی زندگی اجیرن،ایک کے بعد ایک مظالم ڈھائے جانے لگے،،نسلوں سے بسنے والے بھارتی مسلمانوں کے لئے بھارتی زمین تنگ پڑنے لگی،ریاست آسام کے بعد اتر پردیش اور ہریانہ میں بھی ہٹلر مودی کی سوچ کی عکاسی کرتا قانون”آر سی ” لگنے کا خدشہ پیدا ہوگیامودی کے سب سے بڑے چیلے اور متعصب ریاستی وزیراعلیٰ یوگی ادیتیہ ناتھ کا کہنا ہے کہ وہ آسام کی طرز پر یو پی میں بھی نیشنل رجسٹر آف سیٹزن نافذ کرنے کا سوچ رہے ہیں۔انتہا پسند وزیراعلیٰ آسام میں این آر سی کا دفاع کرتے ہوئے بولے کہ وہ مختلف پہلوؤں کا جائزہ لے رہے ہیں اور ضرورت ہوئی تو این آر سی پر عمل کیا جائے گا۔دوسری جانب ہریانہ کے وزیراعلیٰ منوہرلال کھٹرنے بھی این آر سی لاگو کرنے کا اشارہ دیتے ہوئے کہا کہ صوبے میں مقیم غیرقانونی تارکین وطن کو نکالنے پر غور کررہے ہیںاس سے قبل آسام میں لاکھوں تارکین وطن مسلمانوں کو اسی این آر سی کے ذریعے ملک بدری یا پھر سزاؤں کا سامنا ہےجبکہ یوگی کے اس اعلان کے بعد یو پی کے مسلمان بھی خوف ہراس میں مبتلا اور سہمے ہوئے ہیں

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.