نواز شریف کی نئی دستاویز پیش کرنے کی درخواست منظور

احتساب عدالت نے نیب کا اعتراض مسترد کرتے ہوئے نواز شریف کے وکیل کو نئی دستاویز پیش کرنے کی اجازت دے دی، جس کے بعد حسن نواز کی فروخت شدہ جائیداد سے متعلق دستاویز ریکارڈ کا حصہ بنا دی گئی۔ احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کا اپنے ریمارکس میں کہنا ہے کہ انصاف کے تقاضے پورے کرنے کے لیے دستاویز قبول کی ہے۔ عدالت نے فلیگ شپ ریفرنس میں پیش کی گئی نئی دستاویز کو ریکارڈ کا حصہ بنا لیا۔ اس موقع پر نوازشریف کے وکیل نے فیصلے کا دن بدلنے کی استدعا کر دی۔ جس پر جج ارشد ملک نے کہا کہ میں کوشش کروں گا کہ مقررہ تاریخ پر ہی فیصلہ سنایا جائے، یہ میری ٹینشن ہے، آپ کیوں پریشان ہو رہے ہیں؟

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.