سرگودھا:این اے 91 کے 20پولنگ اسٹیشنز پردوبارہ ووٹنگ

سرگودھا کے حلقہ این اے91 میں ضمنی الیکشن آج ہورہے ہیں ۔ بیس پولنگ اسٹیشنزپر صبح آٹھ بجے سے ووٹنگ کا عمل جاری ہے جو شام پانچ بجے تک بغیر کسی وقفہ کے جاری رہے گا۔ حلقے میں 65پولنگ بوتھ قائم کئے گئے ہیں جہاں 27ہزار 451ووٹرزحق رائےدہی استعمال کریں گے
امن وامان کے لئے تمام پولنگ اسٹیشنز کو حساس قرار دے کر فول پروف سکیورٹی انتظامات کئے گئے ہیں اور پولنگ اسٹیشنز پر پولیس،رینجرز اور ایلیٹ فورس کو تعینات کیا گیا ہےاس کےعلاوہ آرمی کو بھی الرٹ رکھا گیا ہے۔
حلقہ این اے اکیانوے میں ری پولنگ کے لئے ضلعی انتظامیہ نے دفعہ ایک سوچوالیس کے تحت علاقہ میں پولنگ اسٹیشنز کے اندر موبائل فون لے جانے،اسلحہ کی نمائش ،اسلحہ لے کر چلنے اور لاوڈ سپیکر کے استعمال پر پابندی عائد کر رکھی ہے۔
حلقہ این اے اکیانوے میں ری پولنگ کے لئے ضلعی انتظامیہ نے دفعہ ایک سوچوالیس کے تحت علاقہ میں پولنگ اسٹیشنز کے اندر موبائل فون لے جانے،اسلحہ کی نمائش ،اسلحہ لے کر چلنے اور لاوڈ سپیکر کے استعمال پر پابندی عائد کر رکھی ہے۔
25جولائی کو عام انتخابات میں اس حلقہ سے مسلم لیگ ن کے ڈاکٹر ذوالفقار علی بھٹی نےایک لاکھ دس ہزار چھ سو چون جبکہ پی ٹی آئی کے چوہدری عامر سلطان چیمہ نے ایک لاکھ دس ہزار پانچ سو سڑسٹھ 46 ووٹ حاصل کئے اس طرح ذوالفقار بھٹی کو87ووٹوں سے برتری سے کامیاب قرار دیا گیا۔12 اگست کو عامر سلطان چیمہ کی درخواست پر لاہور ہائیکورٹ نے دوبارہ گنتی کاحکم دیا
پندرہ نومبر تک259 پولنگ اسٹیشنوں کی گنتی ہوسکی تھی کہ سپریم کورٹ نے تمام 345 پولنگ اسٹیشنوں کی گنتی کا حکم دے دیا۔ جس کے تحت 28نومبر تک گنتی کے عمل پی ٹی آئی کے چوہدری عامر سلطان چیمہ کےایک لاکھ سات ہزارنوسوسینتیس جبکہ مسلم لیگ ن کے ذوالفقار بھٹی کے ای لاکھ چھ ہزار چھ سو اکیاون ووٹ نکلے تاہم ریٹرننگ آفیسر نے 20 پولنگ اسٹیشنوں کے بیگز کی سیلوں کی تبدیلی اور ووٹوں کی ٹمپرنگ سامنے آنے پر معاملہ الیکشن کمشن کے سپرد کردیا جس پر مذکورہ 20 پولنگ اسٹیشنز پر دوبارہ گنتی کا حکم دیا گیا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.