بھارتی فلم انڈسٹری بھی مودی کو “فاشسٹ” قراردینے لگی

ایک ٹی وی انٹرویو کے دوران صحافی نےجب ان سےسوال کیا کہ کیاآپ وزیراعظم مودی اوران کےطرزحکمرانی کوفسطائی سمجھتے ہیں؟جس کے جواب میں مہیش بھٹ اورجاوید اختر نے بےساختہ کہا ، جی ہاں۔جاوید اختر نے مزید کہا کہ ایک فاشسٹ شخص کے سر پر سینگ نہیں ہوتے یہ ایک احساس برتری سے لبریز مخصوص ذہنیت کا نام ہے جو یہ سوچ رکھتے ہیں کہ ہم دوسروں سے بہتر ہیں اور جو کچھ بھی مسائل پیدا ہورہے ہیں وہ دراصل دوسروں کی وجہ سے ہورہے ہیں اور یوں وہ اپنے علاوہ سب سے نفرت کرنے لگتے ہیں۔اسی طرح اسلامو فوبیا سے متعلق پوچھے گئے سوال کے جواب میں مہیش بھٹ نے کہا کہ یہ صورت حال نائن الیون کے بعد پیدا ہوئی ہے جس میں میڈیا نے اہم کردار ادا کیا، بھارت میں بھی لوگ اس کے زیر اثر آگئے اور بی جے پی کی تو پوری سیاست ہی مسلمانوں سے نفرت کے گرد گھومتی ہے جو کہ ایک عام بھارتی کی نمائندگی نہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: