کسی کوجموں وکشمیرکےزمینی حقائق تبدیل کرنےکااختیارنہیں

اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی نے امریکی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئےکہا کہ کشمیرکاتنازع سلامتی کونسل کےایجنڈےمیں شامل ہےاور مسئلہ کشمیرسےمتعلق سلامتی کونسل کی متعددقراردادیں موجودہیں، سلامتی کونسل کی قرارداد38کےمطابق کسی کوجموں وکشمیرکےزمینی حقائق تبدیل کرنےکااختیارنہیں،،،پاکستان سلامتی کونسل سےرجوع کرنےجارہاہےملیحہ لودھی نے کہا کہ اقوام متحدہ کےاعلیٰ حکام سےبات ہوئی ہے،انھیں ذمےداریوں کی یاددہانی کرائی ہے،پاکستان کاہمیشہ مطالبہ رہا ہےکہ مسئلہ کشمیرکومذاکرات کےذریعےحل کیاجائےاوراس مسئلے کاحل اقوام متحدہ کی قراردادوں اورکشمیریوں کی امنگوں کےمطابق نکالاجائے،پاکستان مسئلہ کشمیرکوپرامن طریقےسےحل کرناچاہتاہے، پاکستان نہیں چاہتا کہ کشیدگی میں اضافہ ہو۔انہوں نے کہا کہ بھارتی حکومت نےجواقدام کیااسےکوئی کشمیری قبول نہیں کرےگا۔مقبوضہ کشمیرمیں کرفیونافذہے اور لوگ گھروں میں محصورہیں لیکن ایک دن یہ پابندیاں اٹھیں گی اورتب بھارت کشمیریوں کی آواز سنےگا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.