مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی فوج کے مظالم جاری

0
بھارتی فوج کے ظلم و جبر کی رات مزید طول پکڑ گئی،مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی فوج کشمیریوں پر گولہ بھاری اور توپوں کا استعمال کرنے لگی،ضلع کپواڑہ میں بھارت نے مزید تین کشمیریوں کو شہید کر دیا۔کشمیری میڈیا کا کہنا ہے کہ ان کشمیریوں کو حسب معمول نام نہاد آپریشن کے دوران نشانہ بنایا گیا۔جب کہ وادی میں کرفیو اور لاک ڈائون 254 ویں روز میں داخل ہو گیا۔ معمولات زندگی بدستور مفلوج ہیںمقبوضہ وادی میں جبری اور سخت پابندیوں کا حامل کرفیو نافذ ہے۔ جس میں کسی بھی شہری کو کسی صورت گھر سے نکلنے کی اجازت نہیں۔ ہسپتال تک بند ہیں موت کی صورت میں جنازہ اٹھانے اور قبرستان میں دفنانے کی بھی اجازت نہیں۔ وادی میں انسانی بحران بدترین صورت اختیار کر چکا ہے۔ہسپتالوں اور ادویات تک رسائی انسانیت کی توہین کی بھیانک مثال ہے،اورخوراک کی شدید قلت سے کشمیری فاقوں پر مجبور ہوگئےہیںادھربھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر کو 8 ماہ سے چھاؤنی بنا رکھا ہے، ان 8 ماہ کے دوران بھارتی فوج کی بربریت سے 87 کشمیری شہید ہو چکے ہیں،بھارتی فوج کی جارحیت سے 956 کشمیری زخمی ہوئے ،وادی میں ہزاروں کشمیری جیلوں میں قید و بند کی تکالیف سے گزر رہے ہیں۔5 اگست 2019 کو بھارت نے جموں و کشمیر کی خصوصی اور الگ حیثیت کا خاتمہ کرکے اسے بھارت کا غیر قانونی طور پر حصہ بنا لیا تھا۔دوسری طرف مقبوضہ کشمیر میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کا خطرہ بھی بڑھ رہا ہے، وائرس سے متاثرین کی تعداد 92 ہو چکی ہے، جب کہ 2 افراد جاں بحق ہو چکے ہیں۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: