!!!جنت نظیروادی میں جبری پابندیوں کا 45واں روز

مقبوضہ کشمیر میں کرفیو نافذ ہوئے 45 روز ہوگئے، بھارت کے غاصبانہ قبضے میں جکڑی جنت نظیر وادی کشمیر کے عوام 45 روز سے کاروبار،تعلیم اور روزمرہ کی زندگی گزارنے سے محروم ہیں۔جدید اسلحے سے لیس بھارتی فوجی نہتے کشمیریوں سے خوفزدہ ہیں۔ قابض فوج نے سرینگر سمیت مختلف سڑکوں کو رکاوٹیں لگا کربند کردیا گیا۔جنت نظیر وادی میں انٹرنیٹ،موبائل سروس اور ٹی وی نشریات بدستور بند ہیں۔ہسپتالوں میں دواؤں کی قلت کا بحران سنگین صورت حال اختیارکرگیا جبکہ تعلیمی اداروں اور کاروباری مراکز پر بھی مسلسل تالے ہیں۔گجرات کے قصائی نےحریت رہنماؤں سمیت سابق بھارت نواز سیاستدانوں کو بھی گرفتار کیا ہوا ہےمسلسل پابندیوں اورلاک ڈاؤن کے باوجود مودی سرکار کشمیریوں کے بلند حوصلے پست نہ کرسکی ،،،وادی کے مختلف علاقوں میں بھارتی مظالم کے خلاف کرفیو کی پابندیاں توڑ کرکشمیریوں کابھرپور احتجاج جاری ہے ،،احتجاج کے دوران قابض بھارتی فوج نے نہتی کشمیری عوام کو شدید تشددکا نشانہ بنایا،جس سے متعددکشمیری زخمی ہوگئے،،،کشمیر میڈیا سروس کے مطابق وادی میں کرفیو کے باعث 3 ہزار 9 سو کروڑ کا نقصان ہو چکا ہے،جبکہ سرینگر ہسپتال انتظامیہ کے مطابق کرفیو کے باعث روزانہ 6 مریض لقمہ اجل بن جاتے ہیں

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.