کےالیکٹرک کی ”مہربانیاں”

شہرقائد کےباسی جائیں توجائیں کہاں،،سورج سوانیزےپر،،اوربجلی فراہمی کےادارےکےالیکٹرک کی آنکھیں ماتھےپر،،،روزانہ کئی کئی گھنٹے کی لوڈشیڈنگ نےشدیدگرمی اورحبس کےمارے کراچی کےشہریوں کی زندگی اجیرن کردی۔شدیدگرمی میں کے الیکٹرک شہریوں کو ریلیف فراہم کرنے میں مکمل طورپرناکام ہوگیا،بجلی کی فراہمی کےادارے نے مختلف علاقوں میں گرمی کی شدت بڑھتے ہی بجلی کی بندش کا دورانیہ بڑھادیا ، دن میں لوڈشیڈنگ کےبعد رات میں بھی شہریوں کو بجلی فراہم نہیں کی جارہی۔لیاقت آباد سی ون ایریا ، کشمیر کالونی، فیڈرل بی ایریا اور نارتھ ناظم آباد کے مختلف بلاکس لوڈشیڈنگ کےباعث سب سے زیادہ متاثرہیں،بلدیہ ٹاؤن، ملیر رفاہ عام، ملیر ہالٹ اور اطراف کے علاقوں میں بھی بجلی گھنٹوں غائب رہنامعمول بن گیاہےدوسری جانب کے الیکٹرک کی انتظامیہ نے کراچی میں لوڈشیڈنگ کی وجہ گیس پریشر میں کمی کو قراردے دیا ۔ترجمان کے الیکٹرک کے مطابق گیس پریشر میں کمی کے باعث کچھ پاورپلانٹس کی پیداواری صلاحیت متاثر ہے اور اسی وجہ سے لوڈ مینجمنٹ کی جارہی ہے،انتظامیہ کا کہنا ہے کہ پاورپلانٹس کوگیس پریشرمیں بہتری سے صورتحال جلد بہترہوجائے گی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.