اسرائیلی پارلیمان تحلیل

اسرائیلی حکومت کو انتہائی قدامت پسند عقائد کے حامل یہودیوں کو فوج میں شامل کرنے کا متنازع قانون پاس کرنے کیلئے اکثریت حاصل نہیں تھی جبکہ حکومت کے ایک اہم اتحادی کے استعفیٰ کے بعد اسرائیلی حکومت کمزور ہو گئی تھی۔ اس صورتحال پرنیتن یاہونے پارلیمنٹ کو تحلیل کرنے کا فیصلہ کیا۔

اس کے علاوہ اسرائیل کے سب سے زیادہ مدت تک وزیراعظم رہنے والے نیتن یاہو کےخلاف تین کرپشن کیسز پر بھی حکومتی اتحاد پرسوالات اٹھائے جا رہے تھے۔ نیتن یاہو کا پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہنا تھا کہ قبل از وقت انتخابات اپریل 2019 میں ہوں گے اور امید ہے کہ موجودہ حکمران اتحاد آئندہ انتخابات میں بھی کامیابی حاصل کرے گا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.