صہیونی ریاست میں ڈیڑھ سال سے جاری سیاسی تعطل ختم

0
اسرائیل کی پارلیمان الکنیست میں وزیراعظم بنیامین نیتن یاہو اور ان کے سیاسی حریف بینی گینز کے زیر قیادت قومی اتحاد کی حکومت نے حلف اٹھا لیا ۔ پارلیمان کے ارکان نے کثرت رائے سے تین سال کے لیے مخلوط حکومت کی منظوری دی ۔اس طرح صہیونی ریاست میں گذشتہ قریبا ڈیڑھ سال سے جاری سیاسی تعطل کا بھی خاتمہ ہوگیا ۔دوسری جانب اسرائیلی وزیراعظم نے یہودیوں کی آبادکاری کے متعلق نیا پلان دیدیا۔ بینجمن نیتن یاہو نے کہا ہے کہ اسرائیل میں حلف اٹھانے والی نئی حکومت کو فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے میں اسرائیلی خودمختاری کا اطلاق کرنا چاہیے جبکہ ان کے سیاسی حریف بینی گانز نے اس بات پر اتفاق کیا کہ وہ آبادکاری کے متنازع منصوبے کے تحت یکم جولائی تک مقبوضہ مغربی کنارے کے حصے کو اسرائیل میں شامل کرلیں گے تاہم فلسطینی سیاستدانوں نے اس قدم کو غیر قانونی قرار دے کر مسترد کر دیا۔ادھراسرائیلی فوج نے لبنانی سرحد پر شامی چرواہے کو گولی ماردی، لبنانی فوج کی جانب سے جاری بیان میں کہاگیا کہ غلطی سے سرحد عبور کرنے والا شامی شہری محمد نورالدین عبدالالعظیم ہے اور وہ بھیڑ بکریاں چراتے ہوئے غلطی سے سرحد عبور کرگیا تھا جسے صیہونی فوجیوں نے گولی مار کرزخمی کردیا ۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: