!!!عراق میں خونریزی کا معاملہ

عراقی وزیراعظم کے دفتر سے جاری بیان میں کہا گیا کہ وزیراعظم عادل عبدالمہدی نے امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیو سے مطالبہ کیا کہ ملک میں جاری کشیدگی کے خاتمے کے لیے کردار ادا کریں۔وزیراعظم نے تصدیق کی کہ ملک بھر میں سکیورٹی فورسز نے صورتحال کو کنٹرول کرلیاہے اور امن واستحکام کو بحال کردیا گیا ہے۔وزیراعظم عادل عبدالمہدی کاکہنا تھا کہ حکومت کی جانب سے مظاہرین کو اصلاحات کا پیکیج فراہم کردیا گیا ہے،،، جبکہ مظاہرین کے مطالبات پورے کرنے کیلئے مزید اقدامات بھی کیے جائیں گے۔دوسری جانب امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیو نےوزیراعظم عادل عبدالمہدی کو ہر قسم کے تعاون کی یقین دہانی کرائی اور کہا کہ مشکل کی اس گھڑی میں امریکا عراق کی مدد جاری رکھے گاعراق میں غربت اورکرپشن کے باعث ان حکومت مخالف عوامی مظاہروں میں اب تک چھ ہزار سے زائد افراد زخمی بھی ہو چکے ہیں۔ زخمیوں میں بارہ سو کے قریب فوجی اور پولیس اہلکار بھی شامل ہیں۔ادھر عراق میں احتجاجی مظاہروں کے بعد وزیر اعظم عادل عبد الہمدی نے ملک میں قانونی اور مالیاتی اصلاحات کا اعلان کر دیا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.