شاہینوں کو ناممکن کو ممکن بنانے کا چیلنج درپیش

ورلڈکپ کے سیمی فائنل میں پہنچنے کیلئے پاکستان کو بنگلہ دیش سے جیت درکار تھی ،،لیکن انگلینڈ اور نیوزی لینڈ کے میچ نے سارانقشہ ہی بدل دیا،،،اوراب بات جیت سے بھی دورجا نکلی ہے،پاکستان کو بنگلہ دیش کیخلاف ٹاکرے میں غیرمعمولی پرفارمنس دکھانا ہوگی اور اگر ایسا ہوگیا تویہ شاید کرکٹ کی تاریخ کا ایک الگ ہی عجوبہ میچ ہوگا۔انگلینڈ سے شکست کے باوجود نیوزی لینڈ 11 پوائنٹس کے ساتھ چوتھے نمبر پر ہے، نیوزی لینڈ اور پاکستان کے درمیان رن ریٹ کا فرق اتنا ہے کہ جسے ایک میچ میں کور کرنا ممکن نہیں، کیویز کا رن ریٹ 0.175 ہےجبکہ پاکستان کے 9 پوائنٹس اور رن ریٹ منفی صفر اعشاریہ سات نو دو ہےپاکستان کو بنگلا دیش کے خلاف میچ تو ہر حال میں جیتنا ہے لیکن اس سے صرف پوائنٹس برابر ہوں گے ،سیمی فائنل میں پہنچنے کیلئے پاکستان کو بنگال ٹائیگرز کو کم سے کم 316 رنز سے شکست دینا ہوگی جو کہ بظاہر ناممکن نظر آتا ہے۔ اگر پاکستان پہلے بیٹنگ کرتا ہے اور 400 رنز بناتا ہے تو اسے بنگلادیش کو 84 رنز پر آؤٹ کرنا ہوگا۔اگر پاکستان نے پہلے کھیلتے ہوئے 350 رنز بنائے تو پھر حریف کو 316 رنز پر آؤٹ کرنا ہوگا۔اور۔۔۔۔۔اگر بنگال ٹائیگرز نے پہلے بیٹنگ کی تو پاکستان سیمی فائنل سے باہر ہوجائے گا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.