انسان اہم ہیں یا ہتھیار،دنیا کو فیصلہ کرنا ہوگا

سوویت یونین کے سابق صدر میخائل گورباچوف نے دنیا کو خبردارکیا ہےکہ جوہری ہتھیاروں کی دوڑ میں مغرب اور روس کے درمیان کشیدگی نے دنیا کو بہت بڑے خطرے میں ڈال دیا ہے۔ برطانوی نشریاتی ادارے کو انٹرویو میں میخائل گوربا چوف کا کہنا تھا کہ دنیا کے تمام ممالک کو جوہری ہتھیاروں کے خاتمے کا اعلان کردینا چاہیے۔میخائل گورباچوف نے کہا کہ جب تک بڑے پیمانے پر تباہی پھیلانے والے ہتھیاروں کا وجود رہے گا خاص طور پر ایٹمی ہتھیاروں کا، تب تک دنیا کو بہت بڑا خطرہ لاحق رہے گا۔گورباچوف نے مزید کہا کہ ایٹمی ہتھیاروں کا خاتمہ انسانوں اور زمین کی بقا کے لیے بہت ضروری ہے، انہوں نے کہا کہ سوویت یونین نے ماضی میں خون خرابے سے بچنے کیلئے مغربی اور مشرقی جرمنی کے اتحاد میں کوئی مداخلت نہیں کی ۔سرد جنگ کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ سرد جنگ سرد سہی لیکن جنگ ہے۔برطانیہ کے یورپی یونین سے انخلاء کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ بریگزٹ پر میں کوئی مشورہ نہیں دے سکتا کیونکہ برطانوی خود بہت ہوشیار ہیں ۔سابق سوویت یونین کے صدر میخائل گورباچوف اسلحہ کے خلاف تھے اور ان کی کوششوں سے 1987 میں یوایس ایس آر اور امریکا کے درمیان آرمز کنٹرول کا معاہدہ تھا جس کے تحت تمام کم اور درمیانے فاصلے تک مار کرنے والے جوہری اور غیر جوہری میزائلوں کی تیاری ممنوع قرار دی گئی تھی تاہم تیس سال سے زیادہ عرصے بعد اس کے خاتمے سے اسلحے کی نئی دوڑ کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.