حکومت وعدہ کرکےمکرگئی

کھلاڑیوں کی حکومت کی نوبال،،،اضافی گیس بلوں سے متاثرہ صارفین کی دادرسی کاوعدہ پورانہ کیا،،بلوں کی درستگی اوراداکردہ زائدرقم کی واپسی کا معاملہ ہی گول کرگئی۔چار ماہ گزرنے باوجود گیس صارفین کی اکثریت کو اضافی رقم واپس منتقل نہ ہو سکی۔
سوئی ناردرن نے اضافی بلوں کے متاثرین کے گیس میٹر عدم ادائیگی پر اتارنا شروع کر دیئے اور ریلیف کے منتظر صارفین گیس بلوں کی اقساط کرانے پر مجبور ہیں۔وزیر اعظم عمران خان نے سردیوں میں اضافی گیس بلوں کے معاملے پر نوٹس لیا تھا۔
سوئی ناردرن کے 32 لاکھ سے زائد صارفین کو اضافی بل آئے تھے اور سابق وزیر پیٹرولیم غلام سرور خان نے بھی اضافی بلوں کے معاملے پر حکومتی غلطی تسلیم کی تھی۔غلام سرور خان اضافی رقم کی واپسی کے لیے صارفین کو تسلیاں دیتے رہے اور اضافی گیس بلوں کے معاملے پر انکوائریاں بھی ہوتی رہیں لیکن اب سرےسےاس پرکام ہی روک دیاگیاہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.