۔13 پاور پلانٹ بند،بجلی کا شدید بحران

حکومت بجلی اور گیس بحران پر قابو پانے میں ناکام ہوگئی۔ تربیلا اورمنگلا میں بجلی پیدا کرنےوالے22 یونٹس بند ہیں جبکہ گدو،بلوکی،حویلی شاہ بہادرسمیت 13 پاورپلانٹس بند ہیں جس کے باعث تین روز سے جاری بجلی کا بحران شدت اختیار کر گیا۔

پیپکو کے مطابق ملک بھر میں بجلی کا شارٹ فال 4500 میگاواٹ ہوگیا۔ ملک بھر میں بجلی کی مانگ 14 ہزار 50 جبکہ سپلائی 9 ہزارپانچ سو پچاس میگا واٹ ہے۔ لاہور کے نواحی علاقوں میں لوڈشیڈنگ کا دورانیہ 20 گھنٹے تک پہنچ گیا۔ پنجاب کےدیگرشہروں میں بھی 12 سے 15 گھنٹے بجلی کی بندش ہو رہی ہے، بجلی کے شارٹ فال سے سندھ اوربلوچستان کے کئی اضلاع بھی شدید متاثرہیں۔ وزارت توانائی نے بجلی بحران کو حل کرنے کے بجائے ذمہ داری دھند پرڈال دی۔
دوسری جانب بجلی کے ساتھ گیس کے بحران نے بھی عوام کا جینا محال کررکھا ہے۔ کہیں گیس آتی ہی نہیں، جہاں آتی ہے پریشر میں کمی کے مسائل کا سامنا ہے۔ شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ متبادل ذرائع پر انحصار کرنے والے شہروں میں ڈیلرز نے صورتحال سے فائدہ اٹھاتے ہوئے ایل پی جی،کوئلہ اور لکڑی کی قیمتوں میں من مانا اضافہ کردیا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.