روایت شکن "کرونا” عید کا مزہ کِرکِرا کرنے کی تُل گیا

0
لیکن کرونا وائرس کو رسمِ دنیا کی فکر ہے اور نہ ہی یہ کسی دستور کو ماننے کو تیار ہے،،، یوں لگتا ہے کہ اس بار کرونا نے میٹھی عید کو پھیکا کرنے کا پختہ ارادہ کررکھا ہے،شائد ان نے حبیب جالب یہ نظم سن رکھی ہے
ایسے دستور کومیں نہیں مانتا
اس بار نہ تو عیدالفطر پر نئے نوٹوں کڑکڑاہٹ سنائی دے گی اور نہ گرمجوشی کے ساتھ گلے ملنے کے مناظر دکھائی دیں گے بلکہ یوں لگتا ہے کہ اس بار عید پر رشتہ دار اور دوست احباب عید کی مبارکباد کئی فٹ دور رہ کر ہی دیں گے اور آپ کے جذبات صرف گانے کی حد تک ہی رہ جائیں گے ۔
عید کا دن ہےگلے ہم کو لگا کرملئے،رسم دنیا بھی ہےموقع بھی دستور
کرونا کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے حکومت کی جانب سےعیدالفطر پر لوگوں کا گلے مل کر عید کی مبارکباد دینے پر باقاعدہ پابندی لگائے جانے کا امکان ہے اس کے ساتھ ساتھ عید کے بڑے اجتماعات پر بھی پابندی لگانےپر غور کیا جارہا ہےاس سے قبل سٹیٹ بینک نے نئے کرنسی نوٹ جاری نہ کرنے کا اعلان کررکھا ہے جس کے باعث اس بار بچوں کو "کرارے” نوٹوں کی عیدی نہیں ملے گی ، یوں لگتا ہے کہ اس بار کرونا نے میٹھی عید کو پھیکا کرنے کا پختہ ارادہ کررکھا ہے ۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: