آنکھ اوردماغ کا کام ہوا پرانا،اب پٹھوں سے ممکن ہے ڈرون اڑانا

0

اب تک ڈرون کو آنکھوں کے اشارے اور دماغی سگنلز سے کنٹرول کرنے کے کئی تجربات ہوچکے ہیں لیکن ایم آئی ٹی کے انجینیئروں نے ایسا سسٹم تیار کیا ہے جس کے ذریعے ہاتھوں کی جنبش اور پٹھوں کے سگنل سے ڈرون کو کنٹرول کا جاسکتا ہے
اس تجرباتی سسٹم کو ’کنڈکٹ اے بوٹ‘ کا نام دیا گیا ہےجس میں الیکٹرومایوگرافی نظام اور حرکت محسوس کرنے والے موشن سینسر استعمال کئے گئے ہیں۔ تجرباتی طور پر انہیں ہاتھ اور بازو پر لگایا گیا ۔
پروسیسر میں مشین لرننگ الگورتھم شامل کیا گیا ہے جو بازو کے سگنل اور مختلف حرکات کو دیکھتے ہوئے ان کو ڈرون کے لیے احکامات میں بدلتا ہے۔ یہ ہدایات وائرلیس کے ذریعے ڈرون تک پہنچتی ہے اور اس کے لحاظ سے عمل کرتا ہے۔

جواب دیجئے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: