کشمیر کی کشیدہ صورتحال پر ٹویٹ کیوں کیا؟

آرٹیکل 370 کے خاتمے کیخلاف بھارت کے اندر سے آوازیں اٹھنے لگیں۔ مقبوضہ کشمیر کے ضلع اننت ناگ کے ڈپٹی کمشنر نے مودی سرکار کو آئینہ دکھایا تو برا مان گئے۔ ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر خالد نے اپنے ٹویٹ میں آرٹیکل 370 کے خاتمہ کی شدید مخالفت کی۔مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال پر ٹویٹ کرنے والے مقبوضہ کشمیر کے ضلع اننت ناگ کے ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر خالد کو بھارتی سیکورٹی فورسز نے گرفتار کر کے سرینگر منتقل کر دیا۔ ڈپٹی کمشنر ڈاکٹرخالد نے اپنے ٹویٹ میں لکھا تھا کہ آرٹیکل 370کے خاتمہ کے بعد جموں و کشمیر ایک پنجرہ بن چکا ہے۔ روزمرہ اشیاء ختم ہو چکی ہیں، بحثیت پبلک آفیسر میں ناکام ہو چکا ہوں سیکورٹی فورسز عوام کو تشدد کا نشانہ بنا رہی ہیں جس پر میں شرمندہ ہوں۔ ان کے اس ٹویٹ کے بعد بھارتی حکومت نے ان کا ٹویٹر اکاؤنٹ بند کرنے کے علاوہ انھیں گرفتار کر کے سرینگر منتقل کر دیا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.