مسلم دنیا کی پہلی خاتون وزیراعظم شہید بینظیر کی آج 66 ویں سالگرہ

بے نظیر بھٹو کی سالگرہ کے موقع پر پیپلز پارٹی کے جیالے شہر شہر تقریبات کا انعقاد کر رہے ہیں۔ اس موقع پر پاکستان کے علاوہ امریکا، یورپ اورخلیجی ممالک میں تقریبات منعقد کی جارہی ہیں۔ چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو،بختاور اورآصفہ بھٹو نوڈیرومیں اپنی والدہ کا یوم ولادت منا رہے ہیں۔بے نظیر بھٹو پہلی مرتبہ انیس سو اٹھاسی اور دوسری مرتبہ انیس سو تیرانوے میں پاکستان کی وزیراعظم منتخب ہوئیں۔ اپنے والد شھید ذوالفقار علی بھٹو کی پھانسی کے بعد 29 برس کی عمر میں انہوں نے پیپلز پارٹی کی قیادت سنبھالی،فوجی ڈکٹیٹر ضیاء الحق کے خلاف جدوجھد کی اور جیل بھی گئیں۔ سن 1984 ء میں بے نظیر بھٹو جیل سے رہائی کے بعد برطانیہ چلی گئیں جہاں دو سال جلاوطنی میں گزارے۔انیس سو اٹھاسی میں عام انتخابات میں پیپلزپارٹی کامیاب ہوئی اور بے نظیر بھٹو دو دسمبر1988ء کو 35 سال کی عمر میں پاکستان اور اسلامی دنیا کی پہلی خاتون وزیرِاعظم بنیں۔ گو کہ ان کی حکومت کا تختہ جلد الٹ دیا گیا تاہم 1993 میں وہ دوبارہ الیکشن میں کامیابی حاصل کرکے وزیراعظم منتخب ہوئیں اور اس طرح محترمہ کو پاکستان اورعالم اسلام کی دو دفعہ خاتون وزیراعظم بننے کا اعزاز حاصل ہوا۔ بے نظیر بھٹو کو27 دسمبر2007ء کو راولپنڈی کے تاریخی مقام لیاقت باغ میں ایک جلسہ کے بعد واپس جاتے ہوئے شہید کر دیا گیا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.