تارکینِ وطن کوتحفظ دینے کا تنازع،بیلجیئم حکومت ٹوٹ گئی

بیلجیئم کےوزیراعظم چارلس مشل کی حکومت کا اختتام اس وقت ہوا جب ان کی اتحادی قوم پرست جماعت این وی اے نے اپنی حمایت واپس لیتے ہوئے حکومت سے علیحدگی اختیار کرلی۔این وی اے کا مؤقف تھا کہ بیلجیئم اقوام متحدہ کے ممبرممالک کی جانب سے تارکین وطن کی زندگیوں کے تحفظ اور ان کے انسانی حقوق کا خیال رکھنے کیلئے بنائے گئے معاہدے پر دستخط نہ کرے۔جسے اٹھارہ ماہ کے طویل بین الاقوامی مذاکرات کے بعدرواں سال تیرہ جولائی کو پاس کیا گیا تھا۔ جب حکومت نے اس مسئلے کو پارلیمنٹ میں پیش کیا تو این وی اے کے علاوہ تمام جماعتوں نے دستخط کرنے کے حق میں ووٹ دیا ،،، جس کے بعد حکومت کیلئے اس معاہدے پر عملدرآمد لازمی ہوگیا۔ جبکہ قوم پرست جماعت نے حکومت سے اپنی حمایت واپس لیکر علیحدگی اختیار کرلی اور بیلجیئم کےوزیراعظم کو استعفے پہنچا دیئے،،، قابل ذکر بات یہ ہے کہ اکثریت نہ ہونے کے باوجود موجودہ وزیراعظم ہی آئندہ سال نئے انتخابات کے انعقاد تک نظام حکومت چلائیں گے ۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.