سعودی عرب کا جوہری طاقت کے حصول کا منصوبہ

0
سعودی ٹی وی رپورٹ کے مطابق آئی اے ای اے کے سربراہ رافیل گروسی کا کہنا تھا کہ سعودی عرب جوہری توانائی میں دلچسپی لے رہا ہے اور ہم اسے مطلوبہ تعاون فراہم کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔
رافیل گروسی کے حوالے سے رپورٹ میں مزید بتایا گیا ہے کہ آئی اے ای اے کے عہدیدار نے کہا کہ سعودی عرب کو ایٹمی ایندھن حاصل کرنے سے قبل اضافی احتیاطی تدابیر اختیار کرنا ہوں گی اور جوہری توانائی کے استعمال کے حوالے سے مکمل ضمانت کے معاہدے پر دستخط کرنا ہوں گے۔رواں برس اپریل میں عرب نیوز کی ایک رپورٹ میں کہا گیا تھا کہ امریکی ادارے بلومبرگ کے مطابق سعودی عرب اپنے دارالحکومت ریاض کے قریب پہلا ایٹمی پلانٹ مکمل کرنے والا ہے۔ پہلا سعودی ایٹمی پلانٹ کنگ عبدالعزیز سائنس اینڈ ٹیکنالوجی سٹی ریاض کے جنوب مغرب میں واقع ہے اور گوگل ارتھ کی تصاویر کے مطابق پلانٹ مکمل ہونے کے قریب ہے۔سعودی عرب اس سے قبل متعدد مرتبہ ایٹمی توانائی حاصل کرنے کی خواہش کا اظہار کرتا رہا ہے اور سعودی حکام کا کہنا ہے کہ جوہری ٹیکنالوجی حاصل کرنا چاہتے ہیں اور اس کے مقاصد پرامن ہیں کیونکہ جوہری طاقت کا استعمال اپنے توانائی کے شعبے کو مزید جدت بخشنے کے لیے کیا جائے گا۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: