عرب اور یورپین ممالک کا اسرائیل فلسطین تنازع کے خاتمے پر زور

0
عرب اور یورپین ممالک کے وزرائے خارجہ کا کہنا ہے کہ اسرائیل اور فلسطین کے تنازع کا خاتمہ دو ریاستی حل کے ذریعے ہی ممکن ہے۔
غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق عرب اور یورپین ممالک کے وزرائے خارجہ نے اسرائیل اور فلسطین کے درمیان دو ریاستی حل کے لیے اردن میں اہم ملاقاتیں کیں۔اردن،مصر،فرانس کے وزرائے خارجہ نے ملاقات میں براہ راست شرکت کی۔تاہم کرونا وائرس کی وجہ سے قرنطینہ میں موجود جرمنی کے وزیرخارجہ ملاقات میں آن لائن شریک ہوئے۔ملاقات میں شرکا نے اسرائیل اور فلسطین کو دوبارہ سے مذاکرات شروع کرنے پر زور دیتے ہوئے کہا کہ دو ریاستی حل ہی واحد راستہ ہے جس کے ذریعے طویل عرصے سے جاری اسرائیل فلسطین تنازعہ کا خاتمہ کیا جاسکتا ہے۔
عرب اور یورپین ممالک کی وزرائے خارجہ نے حال ہی میں متحدہ عرب امارات اور بحرین کی جانب سے اسرائیل کے ساتھ تعلقات بحال کرنے کو تاریخی اقدام قرار دیتے ہوئے اس عمل کو خوش آئند قرار دیا۔ شرکاء کا کہنا تھا کہ ان معاہدوں سے ظاہر ہوتا ہے کہ خطے میں امن ممکن ہے۔مصر کے وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ یہ ایک اہم اقدام ہے جو مشرق وسطیٰ میں امن کے عمل کو مزید آگے بڑھائے گا۔اردن کے وزیرخارجہ نے کہا کہ دو ریاستی حل کے بغیر خطے میں جامع اور دیرپا امن ممکن نہیں۔فرانسیسی وزیرخارجہ نے کہا کہ دو ریاستی حل کے علاوہ اور کوئی راستہ نہیں ہے، ہم اس عمل کی حمایت کرنے کیلیے تیار ہیں تاہم دونوں ممالک کو مذاکرات کے لیے سنجیدگی ثابت کرنا ہوگی۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: