منی لانڈرنگ کی روک تھام کیلئےحکومت کاایک اوراہم اقدام

وفاقی حکومت نے کرنسی ایکٹ کسٹم قوانین میں ردو بدل کرتے ہوئے بیرون ملک سفرپرجانےوالوں کےاپنےساتھ 10 ہزار ڈالر سے زائد لے جانے پر پابندی لگادی، ایف بی آر کی جانب سے منی لانڈرنگ کی روک تھام کے لیے کرنسی ڈکلیریشن سے متعلق قانون پر سختی سے عملدرآمد کا فیصلہ کیا گیا ہے۔نئے قوانین کے تحت بیرون ملک جانے والے مسافروں کو کسٹم کرنسی ڈکلیریشن فارم لازمی جمع کرانا ہو گا اور مسافروں کو صرف 10 ہزار ڈالر ساتھ لے جانے کی اجازت ہو گی۔18 سال سے کم عمر مسافر کو 5 ہزار ڈالر جبکہ شیر خوار بچے کے لیے 500 ڈالر تک لے جانے کی اجازت ہو گی۔کرنسی ڈکلیریشن فارم کے اجراء کے لیے ملک کے تمام ایئرپورٹس پر کاؤنٹرز قائم کر دیئے گئے ہیں۔ترجمان کسٹم کے مطابق ایئر پورٹ پر مسافروں کی سہولت کے لیے کسٹم کرنسی ڈکلیریشن فارم کے اجراء اور رقم کی تصدیق کی جائے گی،رش ہونے کے باعث کسٹم کاؤنٹرز پر افرادی قوت میں بھی اضافہ کیا جائے گا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.