پاکستان کے بعد افغانستان کرکٹ میں بھی جوئے کی گونج

0

اسپاٹ فکسنگ کے جرم میں افغانستان کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی شفیق اللہ شفیق پر 6 سال کی پابندی عائد کردی گئی۔ افغان کرکٹ بورڈ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ شفیق اللہ شفیق نے اینٹی کرپشن کوڈ کی خلاف ورزی کے تمام الزامات قبول کرلیے ہیں جس کے بعد وہ 6 سال تک کسی بھی قسم کی کرکٹ نہیں کھیل سکیں گے۔
افغان کرکٹ بورڈ کے مطابق وکٹ کیپر بلے باز شفیق اللہ شفیق پر الزام تھا کہ انہوں نے ناصرف افغان پریمیئر لیگ میں اسپاٹ فکسنگ کی بلکہ بنگلا دیش پریمیئر لیگ میں بھی ساتھی کرکٹر کو فکسنگ پر اکسایا ۔
افغانستان کرکٹ بورڈ کے مطابق شفیق اللہ شفیق نے غلطی مان کر تعاون کا وعدہ کیا ہے، اس لیے ان پر صرف 6 سال کی پابندی عائد کی گئی ہے۔30 سالہ شفیق اللہ نے افغانستان کی جانب سے 24 ایک روزہ اور 46ٹی ٹوئنٹی میچز کھیل رکھے ہیں۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: