کرونا کےباعث پنجاب میں ایک کروڑ 12 لاکھ افراد بیروزگارہونے کا خدشہ

0
پنجاب حکومت نےوزیراعظم سیکرٹریٹ کورپورٹ ارسال کردی ہے،عمران خان کوپیش رپورٹ میں ایشین ڈویلپمنٹ اورپاکستان انسٹیٹوٹ آف ڈویلپمنٹ کےنئےہوشربا اعدادوشمارسامنےآگئے،رپورٹ میں کہا گیا ہےکہ کرونا وائرس سے پنجاب کو 23 کھرب روپے کا نقصان ہوگا جبکہ ایک کروڑ 12 لاکھ افراد بیروزگارہوسکتےہیں
پنجاب میں 3 درجے کے لاک ڈاون ہونےسےصوبائی معشیت کوہونے والےنقصان کتنا ہوگا؟رپورٹ میں بتایا گیا ہے،، رپورٹ کے مطابق مکمل لاک ڈاون کرنے سے 23 کھرب،درمیانے درجے کے لاک ڈاون سے صوبائی معشیت کو 11 کھرب 10 کروڑجبکہ معمولی درجے کے لاک ڈاون سے صوبائی معشیت کو 1 کھرب 43 ارب روپے کا نقصان ہو گا۔
رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مکمل لاک ڈاون کرنے سے 1 کروڑ 12 لاکھ افراد، درمیانے درجے کے لاک ڈاون سے صوبے میں 90 لاکھ 30 ہزار افراد جبکہ معمولی درجے کے لاک ڈاون سے 10 لاکھ 80 ہزار افراد کے بے روزگار ہونے کا اندیشہ ہے،رپورٹ کےمطابق پنجاب میں غربت بڑھنے کا اندیشہ 54 فیصد ظاہر کیا گیا ہے، مکمل لاک ڈاون ہونے سے صوبے میں غربت 34.3 فیصد بڑھ سکتی ہے۔ درمیانے درجے کے لاک ڈاون سے غربت 19.9 فیصد بڑھنے کا اندیشہ ظاہر کیا گیا ہے۔ معمولی درجے کے لاک ڈاون سے غربت 9عشاریہ 4فیصد بڑھ سکتی ہے

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: