بالی ووڈ کے نامور ورسٹائل اداکار عرفان خان چل بسے

0
معروف بھارتی اداکار عرفان خان انتقال کرگئے،انہیں گزشتہ روز بڑی آنت میں انفیکشن کے باعث ممبئی کے کوکیلا بین ہسپتال کے آئی سی یو میں داخل کیا گیا تھا تاہم وہ جانبر نہ ہوسکے۔ گزشتہ دنوں عرفان خان کی والدہ سعیدہ بیگم ریاست راجستھان کے شہر جے پور میں انتقال کر گئیں اور ملک گیر لاک ڈاؤن کے باعث انہوں نے ویڈیو کال کے ذریعے والدہ کی آخری رسومات میں شرکت کی تھی۔
عرفان خان میں 2018 کو کینسر کے موذی مرض کی تشخیص ہوئی تو انہوں نے خود اپنے مداحوں کو اس بارے میں بتایا تھا۔ انہوں نے اپنےٹویٹ میں کہا کہ زندگی میں اچانک کچھ ایسا ہو جاتا ہے جو آپ کو آگے لے کر جاتا ہے۔ میری زندگی کے گزشتہ چند ماہ ایسے ہی رہے ہیں۔ مجھے نیورو اینڈوکرائن ٹیومر نامی مرض ہو گیا ہے لیکن میرے آس پاس موجود لوگوں کے پیار اور طاقت نے مجھ میں امید پیدا کی ہے۔
عرفان خان کینسر کو شکست دینے کیلئے لندن گئے اور بعد ازاں وہ فروری 2019 میں اپنی فلم ‘انگریزی میڈیم’ کی شوٹنگ کے لیے واپس بھارت آئےتھے اور شوٹنگ ختم ہونےکے بعد واپس لندن چلے گئے تھے اس کے بعد وہ لندن میں کینسر کے علاج اور سرجری ہونے کے بعد ستمبر 2019 میں بھارت آئے تھے۔
اپنی بیماری کے باعث عرفان خان فلم ’’انگریزی میڈیم‘‘ کی تشہیر کا حصہ بھی نہیں بن سکے تھے اور یہ فلم عرفان خان کی آخری فلم ثابت ہوئی جس میں کرینہ کپور نے عرفان خان کے ساتھ مرکزی کردار نبھایا۔
عرفان خان کو فلم ’’پان سنگھ تو مر‘‘ میں شاندار اداکاری کرنے پر نیشنل ایوارڈ سے نوازا گیا تھا۔ اس کے علاوہ انہیں فلم ’’مقبول ‘‘ اور ’’پیکو‘‘ میں جاندار پرفارمنس دینے پر ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔
عرفان خان کئی ہالی ووڈ پراجیکٹ کا بھی حصہ رہ چکے ہیں جن میں ’’سلم ڈاگ ملینئر‘‘، ’’جراسک ورلڈ‘‘،’’دی امیزنگ سپائیڈر‘‘ اور ’’لائف آف پائی‘‘ شامل ہیں۔عرفان خان کے انتقال پر بھارتی شوبز شخصیات نے افسوس کا اظہار کیا ہے اور ان کا کہنا ہے کہ عرفان خان کے جانے سے انڈسٹری میں ایک بڑا خلا پیدا ہوگیا ہے۔

جواب دیجئے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: