کرونا نے فیس ماسک کو خزانے میں بدل دیا

کرونا نے ماسک کی قدر اس بڑھادی ہے کہ اب جرائم پیشہ افراد اب سونا چاندی چھوڑ کر اب
فیس ماسک چوری کرنےپر لگ گئے ہیں جس کی ایک مثال کینیا میں دیکھنے کو ملی جہاں پر60 لاکھ فیس ماسک غائب ہو گئے،،،یہ میڈیکل ماسک جرمنی کی فوج نے صحت کے مراکز کے لیے ماسک منگوائے تھےجو کہ برلن پہنچنے تھےجرمن وزارت دفاع کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کینیا کی ایک کمپنی کو60 لاکھ ایف ایف پی 2 ماسک کا آرڈر دیا تھا اور کمپنی کے مطابق آرڈربھجوادیا ہے،اس مال کو 20 مارچ کو برلن پہنچنا تھا لیکن ابھی تک نہیں پہنچا ،وزارت دفاع نے مزید بتایا کہ ماسک غائب ہونے سے حکومت کو مالی نقصان نہیں ہوگا کیوں کہ ماسک کی قیمت جرمنی پہنچنے کے بعد ادا کی جانی تھی البتہ ملک ماسک کی قلت کا خدشہ پیدا ہوگیا ہے جن کی اس وقت شدید ضرورت تھی۔ادھر کینیا کے حکام نے اس واقعہ کی تفتیش شروع کردی ہے اور ان کا کہنا ہے کہ ہم جلد اس معاملے کوحل کرلیں گے
شاید آپ یہ بھی پسند کریں

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: