مقبوضہ کشمیر میں فوجی دہشت گردی کا 44 واں روز

کشمیرمیں بھارت کی فوجی دہشت گردی کو 44 روز ہوگئے اور مقبوضہ وادی دنیا کی سب سے بڑی جیل بن چکی ہے لیکن عالمی سطح سے شدید تنقید کے باوجود مودی سرکار ” میں نہ مانوں ” کی ہٹ دھرمی پر قائم ہیں ۔ادھر قابض بھارتی فوج نےمظلوم کشمیریوں پر عائد بے جا پابندیاں ہٹانے کے بجائے مزید سخت کردیں ،،، کرفیو اور لاک ڈاؤن کے ساتھ ساتھ اب جہانگیر چوک، بخشی سٹیڈیم، سبزی منڈی چوک سمیت سری نگر کے علاقوں میں بلٹ پروف بنکرز قائم کر لیے تاکہ کشمیریوں کی آواز کو مزید دبایا جاسکے۔دوسری جانب مظلوم کشمیریوں کو گھروں میں قید ہوئے ڈیڑھ ماہ ہونے کو ہے ،،، بچے بوڑھے اور بیمار کرب کی کیفیت میں ہیں ،،،لوگوں کے پاس کھانے کو خوراک ہے نہ ہی بچوں کو دودھ دستیاب ہے اس کے علاوہ بیماروں کیلئے ادویات بھی موجود نہیں جس کے باعث مقبوضہ وادی میں انسانی المیہ جنم لے چکا ہے۔دوسری جانب کشمیریوں کے لیے آواز اٹھانے والے عالمی اداروں کے خلاف بھارت کی سازشیں ناکام ہو گئیں،،،ایمنسٹی چیف کا کہنا ہے کشمیر سے متعلق اظہار تشویش پر خاموش کرانے کی بھارتی کوششیں ناکام ہوں گی جبکہ سیکریٹری جنرل ایمنسٹی انٹرنیشنل نے کہا ہے کہ مودی حکومت نے ایمنسٹی کو کچلنے کی بدترین کوشش کی

شاید آپ یہ بھی پسند کریں
1 تبصرہ
  1. Amber Shahzadi کہتے ہیں

    very shameless act by Indian Government

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.