کرونا سےاموات کاسلسلہ نہ رک سکا

0

چین کے شہر ووہان سے پھیلنے والے مہلک وائرس کی وجہ سےمزید 100 افراد جان کی بازی ہار گئے اور اس طرح اب تک اس جان لیوا وائرس سے مرنے والوں کی تعداد ایک ہزار سات سو پینسٹھ ہوگئی جبکہ اس جان لیوا وائرس نے مزیدایک ہزار933 افراد کو بھی اپنی لپیٹ میں لے گیا جس کے بعد کرونا وائرس سےمتاثرہ افراد کی تعداد 70ہزار سےتجاوز کرگئی۔
ادھربرطانیہ کے طبی ماہرین نے ملک بھر میں کرونا وائرس بڑے پیمانے پر پھیلنے کا خدشہ ظاہر کردیا جس کی وجہ سے چار لاکھ شہریوں کی اموات کا امکان ہے۔ دوسری جانب برطانیہ میں ہونے والے ایک سروے میں این ایچ ایس اسٹاف کی جانب سے یہ انکشاف بھی کیا گیا ہے کہ برطانیہ کرونا وائرس سے نمٹنے کے لیے تیار نہیں ہےجبکہ برطانیہ میں اب تک کرونا کے 9 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔
بیجنگ کی ساؤتھ چائنا یونیورسٹی اور ٹیکنالوجی نے شبہ ظاہر کیا ہے جان لیوا کورونا وائرس کی شروعات ووہان کی ایک لیبارٹری”ووہان سینٹر فار ڈیزیز کنٹرول” سے ہوئی جہاں چمگادڑوں اور دیگر جانوروں کو ہونے والی سانس کی بیماریوں پر تحقیقات کی جاتی ہیں۔
رپورٹس کے مطابق چمگادڑوں نے ایک محقق پر حملہ کیا اور اس میں حملے کے نتیجے میں چمگادڑ کا خون محقق کی جلد پر لگ گیا۔اس کے علاوہ مقامی آبادی چمگادڑوں کو غذا کے طور پر بھی استعمال کرتی تھی، سائنس دانوں نے اسی بنیاد پر اندازہ لگایا ہے کہ کورونا وائرس کی شروعات مذکورہ لیبارٹری سے ہوئی۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: