چین کیخلاف امریکا کی تجارتی جنگ اقتصادی دہشتگردی ہے،ایران

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان سید عباس موسوی نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہےکہ چین اور امریکہ کے درمیان موجودہ تجارتی جنگ، دونوں ملکوں کے دو طرفہ تعلقات کی سطح سے بھی اوپر پہنچ سکتی ہے۔انہوں نے کہا کہ اعداد و شمار اور تجزیوں سے پتہ چلتا ہے کہ دونوں ملکوں کے درمیان تجارتی جنگ سے آئندہ دو برسوں میں دنیا کی ناخالص اندرونی پیداوار، چھ ارب ڈالر مالیت تک کم ہو سکتی ہے جس کے نتیجے میں عالمی سطح پر غربت بڑھے گی اور دنیا میں معیار زندگی بھی گھٹ جائے گا۔ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے بین الاقوامی معاہدوں سے باہر نکلنے کے نتیجے میں کشیدگی و بحران میں اضافہ کرنے والے امریکی رویے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ دیگر ملکوں کو نقصان پہنچا کر ماضی کا اپنا مقام بچانے کی امریکی کوشش کامیاب نہیں ہو سکتی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.